کراچی میں ٹارگٹ کلنگ کا نیٹ ورک چلانے والی عورت بے نقاب

ڈی آئی جی سی ٹی ڈی عمر شاہد، ایس ایس پی عارف عزیز اور سندھ رینجرز نے مشترکہ پریس کانفرنس میں بتایا کہ کہکشاں حیدر امریکا میں بیٹھ کر بانی ایم کیو ایم کی ایما پر کراچی میں ٹارگٹ کلنگ ٹیم کی سربراہی کررہی ہیں۔

سی ٹی ڈی اور رینجرز کے حکام نے کراچی میں بے امنی سے متعلق چشم کُشا حقائق میڈیا کے سامنے رکھے۔

سندھ رینجرز کے کرنل شبیر نے کہا کہ کہکشاں حیدر نے بھارتی خفیہ ایجنسی کے را کے ساتھ مل کر دہشت گردی کے کئی منصوبے بنائے۔

2017 میں رینجرز نے ایم کیو ایم لندن کی ٹارگٹ کلرز کی ٹیم پکڑی تھی۔ ٹیم جب جیل گئی تو ان کی معلومات پر خفیہ آپریشن کیا جاتا رہا ہے۔

امریکا سے کہکشاں نامی خاتون ایک ٹیم کراچی میں چلارہی تھی۔ خاتون کی کال ریکارڈنگ بھی سامنے آئی ہے، کہکشاں حیدر پر پہلے ہی ایک مقدمہ درج ہے.

حکام کی جانب سے ایک واٹس ایپ کال بھی چلائی گئی جس میں کہکشاں حیدر بتا رہی تھیں کہ کس طرح ٹارگٹ کلنگ کرنی ہے اور ٹارگٹ کلر کو پیسے فراہم کرنے کا بھی بتایا۔ کال میں ٹارگٹ کلر کو پہلے 50 ہزار روپے دینے کی بات ہوئی اور بعد ازاں انعامی رقم 2 لاکھ روپے کرنے کا کہا گیا۔

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں