قرآن مجید میں جہنم کے بارے میں دی گئی تفصیلات

جہنم کو دیکھتے ہی کافروں کے چہرے سیاہ ہو جائیں گے(یونس/27)
جہنمی جہنم کے عذاب سے تنگ آ کر موت کی طلب کریں گے لیکن انہیں موت نہیں آئے گی(فرقان/13)
جہنم کی آگ جہنمیوں کے چہرے کا گوشت جلا ڈالے گی اور انکے جبڑے باہر نکل آئیں گے (مومنون/41)
جہنم کی آگ نہ زندہ چھوڑے گی اور نہ مرنے دے گی(اعلیٰ /13)
جہنم کی آگ لوگوں کو چکنا چور کر دے گی(ہمزہ/4)
جہنم میں کافروں کو بند کر کے اوپر سے دروازے بند کر دیئے جائیں گے (ہمزہ/8-9)
جہنم میں کافر پھٹکارے ماریں گے (اور شور اس قدر ہوگا کہ)کانوں پڑی آواز سنائی نہیں دے گی(انبیاء /100)
جہنمیوں کو تھوہر کا زہریلا اور کانٹے دار اور بدبو دار درخت کھانے کے لئے دیا جائے گا(دخان/43)
جہنمیوں کے زخموں سے بہنے والا خون اور پیپ نیز کھولتا ہوا پانی جہنمیوں کو پینے کے لئے دیا جائے گا (ابراہیم /16- 17)
جہنمیوں کو آگ کا لباس پہنایا جائے گا (حج / 20)
1⃣1⃣جہنمیوں کے ہاتھ اور پاوں زنجیروں سے باندھ دیئے جائیں گے اور ان کے چہروں پر آپ کے شعلے برسائے جائیں گے (ابراہیم /49- 50)
جہنمیوں کے لئے آگ کا اوڑھنا اور آگ کا بچھونا ہوگا(اعراف/41)
جہنمیوں کے لئے آگ کی چھتریاں اور آگ کے فرش ہوں گے(زمر/ 16)
جہنمیوں کے لئے آگ کی قتاتیں ہوں گی(کہف / 29)
جہنمیوں کی گردن میں آگ کے بھاری طوق ڈالے جائیں گے(حاقہ/30)
جہنمیوں کے پاوں میں آگ کی بھاری بیڑیاں ڈالی جائیں گی(مزمل/12)
جہنمیوں کو سخت زہریلی گرم ہوا اور سخت زہریلے دھویں کا عذاب دیا جائے گا (واقعہ/ 44- 41)
جہنم میں جہنمیوں کو منہ کے بل گھسیٹا جائے گا (قمر/ 48)
جہنمیوں کو آگ کے پہاڑ “صعود” پر چڑھنے کا عذاب دیا جائے گا (مدثر/17)
جہنمیوں کو لوہے کے گرزوں اور ہتھوڑوں سے مارا جائے گا (حج/19)
50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں