استقبال رمضان کے لیے 30 اہم ہدایات

علماء کرام نے رمضان المبارک کے استقبال اور تیاری کے لیے بہت سی اہم ہدایات اور تجاویز بیان فرمائی ہیں جن کا خلاصہ 30اہم ہدایات کی شکل میں ہے۔
فرائض و واجبات کی ادائیگی اور توبہ و استغفار کا اہتمام کریں _
رمضان المبارک کے مسائل سیکھیں اور سکھائیں _
اپنے نفس کو ابھی سے تقوی کا پابند بنائیں ، اللہ رب العزت نے رمضان المبارک میں روزوں کی فرضیت کا اہم مقصد تقویٰ اور پرہیزگاری کا حصول بتایا ہے _
صلہ رحمی میں جلدی کریں ، قطع رحمی کی وجہ سے دعائیں قبول نہیں ہوتیں _
اپنے دلوں کو نفرت ، جذبۂ انتقام اور حسد کی آگ سے صاف کریں دل میں نفرت اور کینہ رکھنے والے کی اللہ سبحانہ و تعالی مغفرت نہیں فرماتے _
گذشتہ سالوں کے روزے اگر کسی عذر سے رہ گئے ہوں تو رمضان آنے سے پہلے پہلے ان کی قضا کرلیں _
رمضان المبارک دعاؤں کی قبولیت کا مہینہ ہے لہذا ابھی سے اپنے آپ کو لمبی دعاؤں کا عادی بنائیں _
صدقات اور خیرات کرنے کی عادت ڈالیں _ موت کے بعد مومن دوبارہ زندگی ملنے پر صدقہ کرنے کی تمنا کرے گا _
کثرت تلاوت کا معمول بنائیں _
رمضان میں راتوں کی عبادات ، تراویح ، تہجد ، تلاوت ذکر و اذکار وغیرہ پابندی سے کریں _
انٹرنیٹ اور سوشل میڈیا سے احتراز کریں نیز ایسے کھیلوں سے بھی احتراز کریں جن میں قیمتی وقت ضائع ہو رہا ہو _
ٹی وی خرافات کا مجموعہ ہے لہذا رمضان کی آمد سے قبل اس سے جان چھڑانے کی کوشش کریں _
رمضان عبادت کا مہینہ ہے شاپنگ اور خریداری کا نہیں لہذا رمضان کی آمد سے پہلے شعبان میں ہی عید کی شاپنگ مکمل کرلیں اور اہل خانہ کو بھی یہ بات سمجھائیں _
رمضان المبارک کے لئے کاموں کا بوجھ ہلکا رکھیں _
رمضان المبارک سے قبل اپنا نظام الاوقات مرتب کریں جس میں صبح اٹھ کر تہجد ، ذکر ، دعائیں ، سحری ، نماز فجر اور تلاوت سے لے کر تراویح و دیگر معمولات تک کے لیے مناسب وقت متعین ہو اور نیند و آرام کی بھی بھرپور رعایت رکھی جائیں _
نوکر خادم چھوٹوں اور ملازمین پر کاموں کا بوجھ ہلکا کریں _
عمرے کی ترتیب بنائیں _
زیادہ سے زیادہ وقت مسجد میں گزاریں _
نیند کم کرنے کی عادت ڈالیں _
چالیس دن تک تکبیر اولیٰ کے ساتھ نماز پڑھیں _
سگریٹ ، نسوار ، پان اور دیگر نشہ آور چیزوں کے استعمال سے اجتناب کرکے اس موذی عادت سے اپنے آپ کو چھڑالیں _
ملاقاتوں کا سلسلہ محدود کریں _
چھوٹی چھوٹی سورتیں زبانی یاد کریں _
بچوں کو روزے رکھنے کی عادت ڈالیں _
کم کھانے کی عادت ڈالیں _
اس رمضان المبارک کو گذشتہ سے ممتاز کریں _ مثلا تیسواں پارہ زبانی یاد کر لیں یا سورہ رحمن یا سورہ یاسین ، سورۃ الملک ، سورہ الم سجدہ زبانی یاد کر لیں یا کسی یتیم کو ڈھونڈ کر اس کی کفالت کا بندوبست کر لیں یا جیلوں میں قید لوگوں کی تعلیم و تربیت کی ترتیب بنائیں یا کہیں پانی کی اشد ضرورت ہو تو ٹیوب ویل ، کنواں یا ٹھنڈے پانی کا پلانٹ لگوا دیں یا مساجد اور مدارس کے ساتھ پرخلوص تعاون کریں یا مستحق طلباء کے لئے فیسوں اور یونیفارم وغیرہ کا بندوبست کرلیں یا کسی غریب لڑکی کی رخصتی کے اخراجات کا بندوبست کر دیں وغیرہ وغیرہ _
ماہ شعبان اور رمضان کی تاریخیں یاد رکھیں ، نبی کریم صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم شعبان کی تاریخیں یاد رکھنے کا بہت زیادہ اہتمام فرماتے _
مالی حقوق سے متعلق مسائل سیکھیں اور ادائیگی کا انتظام اور اہتمام کریں _
رات جلدی سونے کی عادت ڈالیں ، دوستوں کی فضول مجالس ، گپ شپ کی محافل اور رات گئے تک سرانجام دی جانے والی سرگرمیوں سے آہستہ آہستہ کنارہ کشی اختیار کریں _
رمضان المبارک کی تیاری کے حوالے سے درج بالا ہدایات اور تجاویز پر عمل پیرا ہونے کے ساتھ ساتھ اللہ سبحانہ وتعالی سے رمضان المبارک کی روحانیت اور برکات کے حصول کے لیے خصوصی دعائیں مانگیں بالخصوص اس دعا کا خاص اہتمام فرمائیں _
اللہم بارک لنا فی رجب وشعبان وبلغنا رمضان

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں