عمران خان کا ایک بیان

عمران خان نے کل ایک بیان دیا فحاشی پھیلتی ہے تو ریپ کیس بڑھتے ہیں ہمیں فحاشی کو کنٹرول کرنا ہو گا فحاشی سے معاشرے تباہ ہو جاتے ہیں جس پر لنڈے کے لبرل بکاؤ صحافی اسلام اور پاکستان کے تمام دشمنوں نے جی بھر کے شور مچایا اور واویلا کیا کے خان صاحب کا مطلب ہے ریپ ننگ دھڑنگ کپڑوں کی وجہ سے ہوتے ہیں وغیرہ وغیرہ

اب اس تصویر کو دیکھیے اور سمجھیے فحاشی پھیلتی کیسے ہے اور میڈیا کا اس میں کیا رول ہوتا ہے اس تصویر میں نذر آنے والی لڑکی کوئی فلم سٹار یا مشہور سائنسدان یا کرونا ویکسین تیار کرنے والی ڈاکٹر نہیں بلکے ایک پورن سٹار فحش فلموں میں کام کرنے والی بد نام زمانہ عورت ہے

جس کو اسلامی جمہوریہ پاکستان کا میڈیا پروموٹ کر رہا ہے اور پیمرا نام کا ایک بیکار ترین ادارہ خرگوش کی نیند سو رہا ہے اس طرح پھیلتی ہے فحاشی اور اس طرح جب آپ ایک فحاشہ عورت کو پاکستان کے نیوز چینل پر پروموٹ کرتے ہیں اسے کہتے ہیں فحاشی پھیلانا

پاکستان کے سبھی چینلز فحاشی پھیلانے میں اہم رول ادا کر رہے ہیں اسی طرح ہمارے کالج یونیورسٹیاں ہر جگہ آزادی کے نام پر فحاشی کو پروان چڑھایا جا رہا ہے

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں